فلپائن میں6.5شدت کا زلزلہ

فلپائن میں6.5شدت کا زلزلہ ،ہلاکتوں کی تعداد 15ہوگئی ،100سے زائد افراد زخمی ،ہلاکتوں میں مزید اضافے کا خدشہ


ہفتہ کی صبح تک 100 کے قریب آفٹر شاکس کے باعث لوگوں میں خوف وہراس، متاثرہ علاقوں میں امدادی کاروائیاں شروع ،ساحلی شہر میں زلزلے سے زیادہ تر پسماندہ علاقوں میں گھروں اور اسکولوں کی عمارتوں کو نقصان پہنچا،حکام


منیلا (آئی این پی)فلپائن کے جنوبی علاقے میںگزشتہ روز آنے والے زلزلے سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد 15ہوگئی جبکہ 100سے زائد افراد زخمی ہیں ، ہفتہ کی صبح تک 100 کے قریب آفٹر شاکس نے لوگوں کو مزید خوفزدہ کر دیا ، متاثرہ علاقوں میں امدادی کاروائیاں شروع کر دی گئی ہیں،ہلاکتوں میں مزید اضافے کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے ۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق فلپائن میں جمعہ کو دیر گئے صوبہ سریگا ڈیل نورٹے میں 6.5 شدت کے زلزلے سے متعدد عمارتوں اور ایک ہوائی اڈے کو بھی نقصان پہنچا۔سرکاری حکام نے تصدیق کی ہے کہ زلزلے کے نتیجے میں مرنے والوں کی تعداد 15ہوگئی ہے جبکہ 100سے زائد افراد زخمی ہیں جو مختلف ہسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔آتش فشاں اور زیر زمین تبدیلیوں سے متعلق فلپائن کے انسٹیٹیوٹ کے عہدیدار ریناٹو سولیڈم کے مطابق زلزلے کا مرکز سریگا سے 14 کلومیٹر شمال مغرب میں 11 کلومیٹر زیر زمین تھا۔زلزلے کے وقت لوگ سو رہے تھے لیکن طاقت ور جھٹکوں کے باعث وہ اپنے گھروں اور عمارتوں سے باہر نکل آئے۔حکام کا کہنا ہے کہ ہفتہ کی صبح تک 100 کے لگ بھگ بعد از زلزلہ جھٹکوں (آفٹر شاکس) نے لوگوں کو مزید خوفزدہ کر دیا ۔ متاثرہ علاقوں میں امدادی کام شروع کر گیا ہے۔مرنے والوں کے بارے میں بتایا جاتا ہے کہ وہ زلزلے کے باعث عمارتوں کے منہدم ہونے سے موت کا شکار ہوئے۔آفات سے نمٹنے کے صوبائی ادارے کے عہدیدار گلبرٹ گونزالیز نے بتایا ہے کہ ہم تاحال نقصانات اور جائزہ لے کر امدادی سرگرمیوں کا جائزہ لے رہے ہیں۔اس ساحلی شہر میں زلزلے سے زیادہ تر پسماندہ علاقوں میں گھروں اور اسکولوں کی عمارتوں کو نقصان پہنچا۔امدادی کارکنان قریب ہی واقع پوکنوئے نامی دیہات میں بھی مصروف عمل ہیں تاکہ یہاں متاثر ہونے والوں کا بھی صحیح اندازہ لگایا جا سکے۔شہر کے ہوائی اڈے کے رن وے پر زلزلے باعث دراڑیں پڑ گئی تھیں جس کے بعد ایئرپورٹ کو عارضی طور پر بند کر دیا گیا ہے۔متاثرہ علاقے کے لوگوں سے کہا گیا ہے کہ وہ محفوظ مقامات کی طرف منتقل ہو جائیں۔سولیڈم کے مطابق سریگا میں اس سے قبل انیسویں صدی میں طاقتور ترین زلزلہ آیا تھا۔ 1990 میں بھی شمالی جزیرہ لوزون میں 7.7 شدت کے زلزلے نے بڑے پیمانے پر تباہی مچائی تھی اور کم از کم 2000 افراد اس میں موت کا شکار ہوئے تھے۔

You may also like this

20 April 2017

پانامہ کیس،سپریم کورٹ کا فیصلہ {نیوز ڈیسک} ۔

<p style="text-align: justify;"><span style="font-size: 20px;">آج سپریم کورٹ آف پاکستان نے پا

admin
03 March 2017

سیک سیمینار 4مارچ کو کراچی میں ہورہاہے --- نیوز ڈیسک

<div class="td-g-rec td-g-rec-id-content_inline "> <span style="font-size: 20px;">سوشل میڈیا کی جانی

admin
15 February 2017

آرمی چیف ‘ نواز ،شہباز،نثار،عمران شہید احمد مبین کے گھر پہنچ گئے

<div class="qQVYZb" style="text-align: center;"><span style="font-family: Jameel-Noori-Nastaleeq-Kasheeda; font-size

admin

Leave Comments

آج کی بات

انسان حالات کی پیداوار نہیں،حالات انسان کی پیداوارہوتے ہیں۔
{کتاب۔کوئی کام نا ممکن نہیں۔سے اقتباس}